Bismillah

694


۱۰رمضان المبارک۱۴۴۰ھ

اللہ الکافی جل جلالہ وعز شانہ (رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے)

Rangonoor 683 - Allah ul Kaafi

اللہ الکافی جل جلالہ وعز شانہ

رنگ و نور ۔۔۔سعدی کے قلم سے (شمارہ 683)

اللہ تعالیٰ اپنے بندوں کی مدد کے لئے کافی ہیں

حَسْبُنَا اللّٰہُ وَ نِعْمَ الْوَکِیْلُ

اللہ تعالیٰ دشمنوں کے شر سے بچانے کے لئے کافی ہیں

فَسَیَکْفِیْکَھُمُ اللّٰہُ وَ ھُوَ السَّمِیْعُ الْعَلِیْمُ

اللہ تعالیٰ اپنے بندوں کو فتح، نصرت اور غلبہ دینے کے لئے کافی ہیں

 

اَلَیْسَ اللّٰہُ بِکَافٍ عَبْدَہُ

اللہ تعالیٰ دشمنوں کی سازشوں ، تدبیروں اور حملوں کو ناکام بنانے کے لئے کافی ہیں

وَاَفَوِّضُ اَمْرِیْ اِلٰی اللّٰہِ اِنَّ اللّٰہَ بَصِیْرٌ بِالْعِبَادِ

اللہ تعالیٰ طاقتور لشکروں کو شکست دینے کے لئے کافی ہیں

سَیُھْزَمُ الْجَمْعُ وَ یُوَلُّوْنَ الدُّبُرْ

اللہ تعالیٰ دشمنوں کو اُکھاڑنے اور لرزانے کے لئے کافی ہیں

اَللّٰھُمَّ مُنْزِلَ الْکِتَابِ، سَرِیْعَ الْحِسَابِ، مُجْرِیَ السَّحَابِ ھَازِمَ الْاَحْزَابِ،اِھْزِمْھُمْ وَ زَلْزِلْھُمْ

اللہ تعالیٰ خوف کو امن سے اور مغلوبیت کو غلبے سے بدلنے کے لئے کافی ہیں

اَللّٰہُمَّ اسْتُرْعَوْرَاتِنَا وَآمِنْ رَوْعَاتِنَا

اللہ تعالیٰ مشرکوں کی گردنیں توڑنے اور جھکانے کے لئے کافی ہیں

اَللّٰھُمَّ اِنَّا نَجْعَلُکَ فِیْ نُحُوْرِھِمْ وَ نَعُوْذُ بِکَ مِنْ شُرُوْرِھِمْ

اللہ تعالیٰ جس کے ساتھ ہوں اس کے لئے وہ ہر منزل میں کافی ہیں

اَللّٰھُمَّ اکْفِنَاہُمْ بِمَا شِئْتَ،اَللّٰھُمَّ اَعِنَّا وَ لَاتُعِنْ عَلَیْنَا وَانْصُرْنَا وَ لَا تَنْصُرْ عَلَیْنَا وَامْکُرْ لَنَاوَلَا تَمْکُرْ عَلَیْنَا

ہاں بے شک… اللہ الکافی … اللہ الکافی ، اللہ الکافی …جَلَّ جَلَالُہُ وَعَزَّ اِسْمُہُ وَشَاْنُہُ

تین جمع ایک

اللہ تعالیٰ ہر حال میں… اپنے بندوں کے ساتھ ہیں… رسول کریم ﷺ ہر حالت میں اپنے اُمتیوں کے رہنما ہیں… کسی حال میں تنہائی نہیں … بے بسی نہیں … مایوسی نہیں… چند دن پہلے تک ایسے حالات تھے کہ ہم پر … تین چیزیں لازمی تھیں… اور ان تین میں کامیابی تھی…

(۱) شکر کرنا (۲)فخر سے بچنا(۳)عجب سے بچنا

ہر طرف بہاریں مچل رہی تھیں… قوس قزح چھائی ہوئی تھی… خوشی کے شگوفے پھلدار ہو رہے تھے… الحمد للہ رب العالمین … الحمد للہ رب العالمین

اور اب حالات بدل گئے… اب ہم پر تین جمع ایک واجب ہے… اور اسی میں ان شاء اللہ کامیابی ہے

(۱) وہن یعنی بزدلی سے بچنا( ۲) کمزور نہ پڑنا( ۳)نہ دبنا یعنی نہ جھکنا نہ سہارے ڈھونڈنا … اور ایک چیز یہ کہ

یہ دعاء بہت مانگنا …

رَبَّنَا اغْفِرْلَنَا ذُنُوْبَنَا وَ اِسْرَافَنَا فِیْ اَمْرِنَاوَ ثَبِّتْ اَقْدَامَنَاوَ انْصُرْنَاعَلٰی الْقَوْمِ الْکَافِرِیْنَ

یہ تین جمع ایک … یعنی چار کام نصیب ہو جائیں تو مزے ہی مزے… فرمایا

فَآتٰھُمُ اللّٰہُ ثَوَابَ الدُّنْیَا وَحُسْنَ ثَوَابِ الْآخِرَۃِ

دنیا میں بھی… اجر ہی اجر ، خیر ہی خیر… آخرت میں بھی خیر ہی خیر…اب کمزوری ، بزدلی اور جھکنے سے کیسے بچیں؟ … طریقہ آسان ہے نظر آخرت پر رہے اور دعاء اللہ تعالیٰ سے جاری رہے

اَللّٰھُمَّ اِنِّیْ اَعُوْذُ بِکَ مِنَ الْوَھْنِ وَ الضُّعْفِ وَ الْاِسْتِکَانَۃِ

یا اللہ آپ کی حفاظت اور پناہ چاہتا ہوں… بزدلی، کمزوری اور دبنے جھکنے سے…

کتنا مزہ آتا ہے… جب اس موقع پر غزوہ احزاب والی دعاء مانگی جائے

اَللّٰھُمَّ مُنْزِلَ الْکِتَابِ  سَرِیْعَ الْحِسَابِ، مُجْرِیَ السَّحَابِ ھَازِمَ الْاَحْزَابِ،اِھْزِمْھُمْ وَ زَلْزِلْھُمْ

یا اللہ! کتاب کو نازل فرمانے والے… جلد حساب چکانے والے، بادلوں کو ہنکانے والے … لشکروں کو ہرانے والے… ان دشمنوں کو شکست دے اور انہیں لرزا دے… اُکھاڑ دے…

اور ایک روایت میں الفاظ یوں ہیں…

اَللّٰھُمَّ مُنْزِلَ الْکِتَابِ ، مُجْرِیَ السَّحَابِ، ھَازِمَ الْاَحْزَابِ،اِھْزِمْھُمْ وَ انْصُرْنَا عَلَیْھِمْ …

یا اللہ! ہمیں ان کے مقابلے میں اپنی نصرت اور غلبہ عطاء فرما…

اس بات کو بھول جاؤ

انڈیا والوں کا دماغ کام نہیں کر رہا… وہ خود کشی کی طرف بڑھ رہے ہیں… وہ اس بات کو بھول جائیں کہ… ان کا شور شرابا ، ان کی دھمکیاں… ہمیں ڈرا رہی ہیں… بالکل نہیں … بالکل نہیں… ان کی دھمکیوں سے تو ہمارا خون مزید جوش مارتا ہے… ان کی دھمکیاں… ہمارے لئے وہی کام کرتی ہیں… جو کسی شاعر کے لئے سامعین کی واہ واہ کرتی ہے… ایک شاعر کہہ رہے تھے کہ… سامعین کی واہ واہ میں شراب سے بھی زیادہ نشہ ہوتا ہے… شراب کا تو الحمد للہ تجربہ نہیں مگر واقعی… دشمنوں کی دھمکیوں سے بہت لطف آتا ہے…

حَسْبُنَا اللّٰہُ وَ نِعْمَ الْوَکِیْلُ …حَسْبُنَا اللّٰہُ وَ نِعْمَ الْوَکِیْلُ

یہ پیارا کلام…حَسْبُنَا اللّٰہُ وَ نِعْمَ الْوَکِیْلُ … دھمکیوں کے جواب میں ہی کہا گیا تھا تو محبوب حقیقی کو اتنا پسند آیا…

حَسْبُنَا اللّٰہُ وَ نِعْمَ الْوَکِیْلُ…

انڈیا میں ہر بات پر مسلمانوں کو مارا جا رہا تھا … دبایا جا رہا تھا… کشمیر میں ظلم کی آگ جل رہی تھی…اب مظلوموں نے جواب دیا تو… ساری دنیا کو شکایتیں کرتے پھرتے ہیں… یہ کونسی غیرت ہے اور کونسی بہادری… کاش ان میں تھوڑی سی شرم ہوتی تو ڈوب مرتے مگر کہاں

اِنَّمَا الْمُشْرِکُوْنَ نَجَسٌ … اِنَّمَا الْمُشْرِکُوْنَ نَجَسٌ

یہ اللہ تعالیٰ کا فرمان ہے… بے شک سچا ہے…

پاکستانی صحافیوں سے ایک سوال

آپ حضرات و خواتین … کشمیر میں ہونے والی ہر کاروائی کے بعد چند ظلم ڈھا کر اپنے نامہ اعمال کو کیوں سیاہ کرتے ہیں؟ … پہلا ظلم یہ کہ … ہمیشہ یہ سوال اُٹھاتے ہیں کہ… اس کاروائی سے پاکستان کو کیا فائدہ ہوا؟ …

دوسرا ظلم یہ کہ… کشمیری بہادر نوجوانوں کی کاروائی کو انڈیا کے کھاتے میں ڈال دیتے ہیں کہ اس نے خود کرایا ہو گا… تیسرا ظلم یہ کہ… پاکستان میں موجود کشمیری مجاہدین کے حامیوں کو … نعوذ باللہ ، نعوذ باللہ انڈیا کا ایجنٹ کہنا شروع کر دیتے ہیں … آپ سے گزارش ہے کہ… چند باتوں پر غور فرمائیں

(۱)کشمیر پر انڈیا کا بھی دعویٰ ہے اور پاکستان کا بھی… انڈیا نے وہاں سات لاکھ سے زائد آرمی اور مسلح دستے بھیج رکھے ہیں… پاکستان نے وہاں کیا بھیجا ہے؟ انڈیا کشمیر پر قبضے کے لئے ماہانہ اربوں روپے خرچ کر رہا ہے پاکستان کتنا خرچ کر رہا ہے؟ … انڈیا کشمیر کو اپنے قبضے میں رکھنے کے لئے ہر حد سے گزر کر مظالم ڈھا رہا ہے… پاکستان کیا کر رہا ہے؟

مگر اس کے باوجود … کشمیری مسلمان پاکستان کے ساتھ کھڑے ہیں… اور ادھر آپ حضرات کی سنگدلی کا یہ عالم ہے کہ… وہاں اگر کوئی کشمیری مجاہد مضبوط حملہ کر دے تو آپ کو… اپنے کرکٹ میچوں کی فکر لگ جاتی ہے کہ… انڈیا نے یہ کاروائی … ہمارے کرکٹ میچ خراب کرنے کے لئے کرائی ہو گی … اے امت محمد ﷺ کے صحافیو! کچھ تو دین محمدﷺ کے رشتے کی بھی لاج رکھ لیا کرو… نہ تم خود جا کر کشمیری مسلمانوں کا ساتھ دیتے ہو… اور نہ انہیں اپنے دشمن سے لڑنے دیتے ہو… تمہاری بزدلانہ چیخ و پکار کی وجہ سے… ان کی کاروائیاں دھول کے نیچے چھپ جاتی ہیں…وہ اپنی کاروائیاں ظلم سے آزادی کے لئے کریں یا تم لاڈلوں کے فائدے کے لئے ؟

(۲)کیا کشمیری مسلمانوں کی حمایت کا یہ مطلب ہے کہ… وہ صرف مرتے رہیں اور آپ ان کی خبریں سناتے رہیں… ان کے بچے ذبح ہوتے رہیں اور آپ اس کا تذکرہ کبھی کبھار اقوام متحدہ میں کر آئیں… ان کی نسل کشی ہوتی رہے اور آپ صرف… مذمتی بیان دے دیا کریں اور اپنی اس حمایت کا معاوضہ یہ لیں کہ…اگر وہ اپنے دشمن اور اپنے قاتل کو ماریں تو… آپ فوراً ان کی مذمت شروع کر دیں…ایک بیٹے کی شہادت کتنا بڑا صدمہ ہوتی ہے…کسی کا اپنا بیٹا ہو تو وہ تھوڑا سا سوچ لے…

(۳)کشمیری مسلمان حالت جنگ میں ہیں … ان میں سے جو لڑنے نکل چکے ہوتے ہیں وہ بہت سخت حالات میں ہوتے ہیں… ان کو اپنی ایک ایک کاروائی کی تیاری میں… ہفتے اور مہینے لگ جاتے ہیں… یہ بات ہر ذی شعور اچھی طرح سمجھتا ہے…پھر وہ مجاہد کس طرح سے… ہر کاروائی کے وقت خبریں ٹٹول سکتے ہیں کہ… اس وقت پاکستان میں کسی وی آئی پی کا دورہ تو نہیں ہو رہا…کوئی کرکٹ میچ تو نہیں چل رہا … مسلمانوں کے محسن سکھوں کے لئے کوئی راہداری تو نہیں کھولی جا رہی ؟ …

پھر اگر ان کو معلوم ہو جائے کہ… پاکستان تو اس وقت انتہائی نازک حالات میں ہے اور وہاں سپر لیگ کے کرکٹ میچ چل رہے ہیں تو وہ مجاہد فوراً اپنی کاروائی روک لے… خود کو دشمنوں کے حوالے کر دے… قاتلوں کو اپنا گھر سپرد کر دے تاکہ… وہ وہاں عزتیں پامال کریں…خون کی ہولی کھیلیں…

(۴)پاکستان تو جس دن سے… امریکہ اور نیٹو کی صلیبی جنگ کا حصہ بنا ہے یہاں تو ہر وقت حالات نازک ہی رہتے ہیں… ہمارے اس وقت کے حکمرانوں نے اللہ تعالیٰ کے غضب کو دعوت دینے والا گناہ کیا… اور بعد کے حکمرانوں نے اس گناہ کے انڈوں تک کی حفاظت کی… اس گناہ کے بعد سے پاکستان کے حالات کب اچھے ہوئے ہیں؟ … ہم رو رو کر تھک گئے کہ… اس منحوس گناہ سے جان چھڑاؤ تو پاکستان میں امن بھی آ جائے گا اور استحکام بھی… اللہ تعالیٰ صرف تمہارا نہیں ہے… تم نے جن افغان بچوں کا ان کی ماؤں کی گود میں… امریکہ سے قیمہ کروایا ہے…وہ بھی اللہ تعالیٰ کے بندے اور حضرت محمدﷺکے اُمتی تھے… تم اس گناہ سے نہیں نکلو گے تو… حالات اسی طرح رہیں گے… اسی وجہ سے انڈیا جیسا ناپاک، بزدل اور کمینہ ملک… ہر دن تم پر چڑھا آتا ہے… تمہیں دھمکیاں دیتا ہے … اور تم اب بھی اس خواب میں ہو کہ… تمہاری امن امن کی رٹ سے… امریکہ یا عالمی برادری تمہارے حق میں ہو جائیں گے… یاد رکھو… تم مسلمان ہو… تم ان ظالموں کی نگاہ میں… وہ مقام حاصل نہیں کر سکتے جو انڈیا کو حاصل ہے… انڈیا ہر کفر اور کمینگی میں ان کے ساتھ ہوتا ہے… تم اتنا زیادہ نہیں گر سکتے… ہاں اگر تم اسلام کو مضبوط تھام لو… عزت و غیرت سے جینے کا عزم کر لو… تو دنیا تمہیں ضرور تسلیم کرے گی…

مایوسی کی گنجائش نہیں

اللہ تعالیٰ جو چاہتے ہیں کر گذرتے ہیں…

فعال لما یرید

اللہ تعالیٰ ہی پاکستان کی حفاظت فرما رہے ہیں…ماضی میں بھی کئی طوفان آئے اور گذر گئے…

اللہ تعالیٰ ہی کشمیر کی تحریک آزادی کو چلا رہے ہیں… یہ تحریک کئی بار مٹانے کی مکمل کوشش پہلے بھی ہو چکی ہے… مگر اسے مٹانے والے ایسے مٹے کہ دنیا کے رہے اور نہ آخرت کے… اب وہ ذلت و کسمپرسی کی زندگی کاٹ رہے ہیں… یا مرکھپ گئے ہیں…

اللہ تعالیٰ کے ہاں ایمان کی قدر ہے… غیرت کی قدر ہے… بہادری کی قدر ہے…جو ایمان، غیرت اور بہادری پر آتا ہے… اللہ تعالیٰ اس کے ساتھ ہوتے ہیں اور اسے کامیابیوں سے ہمکنار فرماتے ہیں… آج جن کے پاس چار دن کے لئے کچھ اختیارات ہیں… ان کے لئے سنہری موقع ہے کہ…اپنی آخرت کے لئے… اور اسلامی تاریخ میں اعزاز پانے کے لئے… ایمان، غیرت اور بہادری والے فیصلے کریں … اپنے وقتی مفادات کی خاطر… امت محمد ﷺ کے ساتھ بے وفائی نہ کریں…

اللہ تعالیٰ نے ہر انسان کے لئے موت کا ایک وقت مقرر فرما دیا ہے… بزدلی کرنے سے زندگی بڑھتی نہیں ہے… اور ہمت و استقامت دکھانے سے زندگی گھٹتی نہیں ہے… جن سے اللہ تعالیٰ دین کا کام لے رہے ہیں… وہ اپنی زندگی کے آخری سانس تک… بغیر رکے، بغیر تھکے کام کرتے رہیں … موت نے جب آنا ہو گا خود آ جائے گی … مرنے سے پہلے مر جانا ایمان والوں کا شیوہ نہیں ہے… بے شک اللہ ایک ہے…

اَللّٰہُ اَللّٰہُ رَبِّیْ لَا اُشْرِکُ بِہِ شَیْئًا وَ لَا اَتَّخِذُ مِنْ دُوْنِہِ وَلِیًّا

لا الہ الا اللّٰہ،لا الہ الا اللّٰہ،لا الہ الا اللّٰہ محمد رسول اللّٰہ

اللھم صل علی سیدنا محمد والہ وصحبہ وبارک وسلم تسلیما کثیرا کثیرا

لا الہ الا اللّٰہ محمد رسول اللّٰہ

٭…٭…٭

گذارش

یہ رنگ و نور گذشتہ رات لکھا تھا… علی الصبح انڈیا کے ہوائی حملے کی خبر آ گئی…اس پر تفصیلی بات پھر کبھی ان شاء اللہ… یقینی اطلاع ہے کہ الحمد للہ کوئی نقصان نہیں ہوا… انڈیا کی معلومات غلط، حکمران دھوکے باز، فوج بزدل اور میڈیا جھوٹا ہے…

اہل اسلام کے لئے فکر کی کوئی بات نہیں ہے… الحمد للہ رب العالمین

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

Rangonoor Web Designing Copyrights Khabarnama Rangonoor